Home / تازہ ترین خبر / عمران خان اپنے جسم کا مخصوص حصہ 2 انچ بڑا کروانا چاہتے تھے، اور بار بار کہتے تھے کہ۔۔۔“ ریحام خان نے کتاب میں انکشافات کے تمام ریکارڈ توڑ دیئے

عمران خان اپنے جسم کا مخصوص حصہ 2 انچ بڑا کروانا چاہتے تھے، اور بار بار کہتے تھے کہ۔۔۔“ ریحام خان نے کتاب میں انکشافات کے تمام ریکارڈ توڑ دیئے

عمران خان اپنے جسم کا مخصوص حصہ 2 انچ بڑا کروانا چاہتے تھے،  اور بار بار کہتے تھے کہ۔۔۔“ ریحام خان نے کتاب میں انکشافات کے تمام ریکارڈ توڑ دیئے

اسلام آباد  :چئیرمین پاکستان تحریک انصاف عمرا ن خان کی سابقہ اہلیہ ریحام خان کی کتاب ایمزون پر منظر عام پر آ گئی ہے

انہوں نےاپنی زندگی کے حوالے سے کئی انکشافات کیے ہیں۔

گزشتہ دنوں پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان کی سابق اہلیہ ریحام خان کی کتاب نے پاکستانی سیاست میں ہلچل مچادی تھی، کتاب شائع ہونے سے قبل ہی اپنے متنازع متن کے باعث خبروں کی زد میں آگئی تھی، سوشل میڈیا پر جاری کیے جانےوالے کتاب کے متن میں عمران خان سمیت پی ٹی آئی کے متعدد رہنماؤں پر الزام تراشی کی گئی تھی۔ اپنی کتاب میں ریحام خان نے عمران خان پر اقرباپروری اور جنسی ہراسگی کا الزام  بھی عائد کیا تھا۔

اس آن لائن کتاب کی قیمت 9.99ڈالر ہے۔ 

ریحام خان لکھتی ہیں کہ ”عمران خان اپنے عضو مخصوصہ کو مزید 2انچ لمبا کرنے کی شدید خواہش رکھتے تھے۔ وہ اکثر مجھ سے کہتے کہ ”میں سنجیدگی سے سوچ رہا ہوں کہ سرجری کروا کے اپنے عضو مخصوصہ کی لمبائی میں اضافہ کروا لوں۔ میں محسوس کرتا ہوں کہ اسے مزید دو انچ لمبا ہونا چاہیے۔‘ یہ بات انہوں نے کئی بار مجھ سے کہی اور اس حوالے سے انہوں نے آن لائن کچھ ریسرچ بھی کر رکھی تھی۔ ان کے ذہن پر جس طرح جنسیت حاوی تھی مجھے سمجھ نہیں آتی تھی کہ اس سے کیسے ڈیل کروں اور ان کی ایسی احمقانہ باتوں کا کیا جواب دوں۔“ریحام خان نے اپنی کتاب میں عمران خان پر مردوں کی فحش فلمیں دیکھنے کا بھی الزام عائد کیا ہے۔ وہ لکھتی ہیں کہ ”ایک دن میں کمرے میں داخل ہوئی تو عمران خان مردوں کی فحش فلمیں دیکھ رہے تھے اور ساتھ خودلذتی میں مصروف تھے۔ ان کے پاس مردوں کی فحش فلموں کی ڈی وی ڈیز کی ایک وسیع کولیکشن تھی اور وہ ان میں موجود مردوں میں سے بعض کے عضو مخصوصہ کی ’تعریف‘ بھی کرتے تھے۔مردوں کی فحش فلمیں دیکھتے ہوئے عمران خان کو میں نے متعدد بار رنگے ہاتھوں پکڑا۔ یہ ایک ایسی بیوی کے لیے انتہائی تکلیف دہ ہوتا تھا جو کچن میں اپنے شوہر کے لیے کھانے بنا رہی ہوتی تھی اور وہ بیڈروم میں بیٹھا مردوں کی فحش فلمیں دیکھتے ہوئے خودلذتی میں مصروف ہوتا تھا۔ ان کے ذہن پر جس طرح جنسیت حاوی تھی مجھے سمجھ نہیں آتی تھی کہ اس سے کیسے ڈیل کروں اور ان کی ایسی احمقانہ باتوں کا کیا جواب دوں۔

اس کتاب میں ریحام خان نے عمران خان 

کے نجی اور جنسی معاملات کے حوالے سے 

بھی چند تہلکہ خیز انکشافات کیے ہیں۔ 

کتاب میں ایک جگہ وہ لکھتی ہیں کہ ”عمران خان اکثر میرے سامنے بھرا ہوا سگریٹ سلگا لیتے تھے۔ ایک بار مجھے تجسس ہوا اور میں نے جاننے کی کوشش کی کہ اس کے اندر کیا ہوتا ہے۔ وہ اس میں کسی کالے سے مواد سے تھوڑا سا ٹکڑا توڑ کر ڈالتے اور پھر اسے بھر کر پینا شروع کر دیتے تھے۔ وہ مجھے ایسا تاثر دیتے تھے جیسے وہ چرس استعمال کرتے ہیں لیکن اس کی بُو چرس جیسی نہیں ہوتی تھی۔ کئی ماہ بعد جب میں ایک انسداد منشیات مہم کے سلسلے میں ڈاکومنٹری بنا رہی تھی تو مجھے پتا چلا کہ یہ دراصل ہیروئن تھی، جو عمران خان سگریٹ میں بھر کر پیتے تھے۔

ریحام خان لکھتی ہیںکہ جب بھی مجھے گھر سے آرٹیکلز دکھایا کرتی تھی۔ وہ جواب میں مجھے ایک ہی بات کہا کرتے تھے” بے بی ! تم نشےکے بارے میںجانتی ہی کیا ہو۔.۔

تم نے کبھی نشہ کیا ہی کب ہے۔ایک کوک کی بوتل کا مطلب بھی آدھا گلاس شراب پینا ہی ہے” پھر میں نے انھیں کئی بار یہ بھی کہا کہ آپ کی مردانہ کمزوری کی وجہ بھی منشیات ہی ہے۔ اس بات پر عمران خان کئی بار سارا سارا دن پریشان رہتے ۔.۔جاری ہے۔

منشیات کے شواہد ملتے تھے تو میں عمران خان کو نشے کے مضر اثرات کے حوالے سے لیکچر دیتی تھی

کتاب میں ایک جگہ وہ لکھتی ہیں کہ ”جب عمران خان نے مجھے شادی کی پیشکش کی تو انہوں نے کہا کہ’ وہ 2013ءکے عام انتخابات کے نتائج کی وجہ سے بہت ذہنی تناﺅ کا شکار تھے۔

اسی دوران ایک نوجوان لڑکی (جو پاکستان کے انتہائی بااثر صنعت کار کے بھتیجے کی بیوی کی رشتہ دار تھی)عمران خان کے ساتھ تعلق میں حاملہ ہو گئی۔‘ ہم سب نے مئی 2014ءمیں ایک صحافی کی ٹویٹ دیکھی جس میں اشارتاً کہا گیا تھا کہ عمران خان نے ایک 21سالہ لڑکی کو حاملہ کر دیا ہے۔ یہ صحافی عمر چیمہ تھے جن کی اس لڑکی کے حاملہ ہونے کی سٹوری بالکل درست تھی لیکن عمران خان نے اسے جھوٹ قرار دے دیا اور پھر عمرچیمہ کی سوشل میڈیا پر بہت درگت بنی۔

ریحام خان نے مزید لکھا کہ ”یہ سٹوری دراصل عمرچیمہ سے بھی پہلے میرے پاس آئی تھی۔ میں 2014ءکی سردیوں میں ایف 11میں واقع زیفرانوس کیفے میں بیٹھی تھی کہ جنرل حمید گل کے تھنک ٹینک کے لیے کام کرنے والا ایک شخص میرے کنٹینٹ پروڈیوسر (Content Producer)کے ساتھ وہاں آیا اور مجھے یہ سٹوری دی۔

اس نے مجھے بتایا کہ ”جب یہ لڑکی حاملہ ہوئی تھی تو عمران خان نے فون پر اسے دھمکیاں دی تھی کہ وہ اسقاط حمل کروا لے۔ ہم نے اس کی یہ فون کالز ٹیپ کر لی تھیں اور ان کی ریکارڈنگ ہمارے پاس موجود ہے۔“ وہ شخص مجھے کہہ رہے تھے کہ میں یہ سٹوری اپنے پروگرام میں چلا دوں، لیکن میں نے ان کی سرزنش کر دی اور یہ کہہ کر انکار کر دیا کہ میں کوئی ٹیبلائیڈ جرنلسٹ (Tabloid Journalist)نہیں ہوں کہ سیاستدانوں کے بیڈرومز میں دلچسپی لیتی پھروں۔

خاندانی پس منظر

ریحام خان نے اپنی کتاب میں بتایا ہے کہ ان کے والدین ساٹھ کی دہائی میں پاکستان سے لیبیا آئے اوروہیں ان کی پیدائش ہوئی، ہم دوبہنیں اور ایک بھائی ہیں جب کہ والد لیبیا میں ڈاکٹرتھے۔

پہلے شوہر سے ناچاقی

ریحام خان نے  کتاب میں اپنے پہلے شوہر اعجاز رحمان کے حوالے سے چشم کشاانکشافات کیے ہیں۔  کتاب میں انہوں نے کہا کہ میرے بچے اردو، پشتو اور پنجابی روانی سے بولتے تھے، ریحام خان نے اپنی بیٹی ردھا کی پیدائش کا ذکر کیا، ردھا برطانیہ کے اسپتال پہنچنے کے پانچ منٹ بعد ہی دنیا میں آگئی، ردھا پیدائش کے بعد مسلسل پندرہ منٹ روتی رہی جیسے دنیا میں آمد پر احتجاج کر رہی ہو، میرا بیٹا ساحر ردھا کا خیال رکھتا، گودمیں لے کراسے فیڈر پلاتا رہتا، ساحر رات کو اٹھ کر چلتا رہتا ریحام خان نے کتاب میں اپنے سابق شوہر کے ظلم کی داستان بیان کرتے ہوئے لکھا کہ  اعجاز نیند سے جگانے پر اس کی پٹائی کرتے، بچوں کو مغربی کھانوں پر لگانے پر اعجاز اکثر طویل لیکچر دیتے، اعجاز بچے کے پیزا کھانے کی خواہش پر بھی بڑھک اٹھتے۔

دوسری بیٹی کی پیدائش

ریحام خان نے مزید لکھا ہے میری دوسری بیٹی انایا کی پیدائش 8 مئی 2003 کو صبح آٹھ بجے ہوئی، اگست 2003 میں اعجاز نے مجھے پاکستان میں چک شہزاد رہنے کے لئے بھیج دیا۔

عمران خان سے پہلی ملاقات

کتاب کے متن کے مطابق ریحام خان کا کہنا ہے کہ تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان  سے ملاقات کے لئے میں نے اپنے گارڈ کو ہمہ وقت ساتھ رہنے کی ہدایت کی، پہلے پارٹی سیکرٹریٹ کے ایک ٹھنڈے اور بے ترتیب بیڈ روم میں نعیم الحق نے میرا انٹرویو کیا پھر نعیم الحق میری کار میں بیٹھ گئے اور ہم بنی گالہ آگئے، نعیم الحق آگے آگے چل رہے تھے، میرے گارڈ نے کان میں سرگوشی کی، یہ آدمی ٹھیک نہیں۔ مجھےایک کمرے میں لے جایا گیا جہاں سر سے پاؤں تک بلیک لباس میں عمر رسیدہ آدمی پشت کر کے کھڑا تھا، کالے لباس والا آدمی کوئی اور نہیں لیجنڈ (عمران خان) خود تھا، انہوں نے مجھے پلک جھپکائے بغیر گھورنا شروع کیا، نعیم الحق نے بطور اینکر میرا تعارف کروایا، میں نے ٹخنوں تک لمبی قمیض اوپر بلیک جمپر اور بلیو ٹراؤزر پہن رکھا تھا، میں نے لباس کا انتخاب سنجیدہ نظر آنے کو مد نظر رکھتے ہوئے کیا، تو آپ کہاں سے ہیں، میز کے دوسری طرف سے مسلسل گھورتے ہوئے سوال پوچھا گیا، برطانیہ سے، میں نے مختصر جواب دیا۔

عمران کی بیٹے سے جھجھک

عمران خان سے شادی کے بعد کے واقعات کے حوالے سے کتاب میں لکھا گیا ہے کہ عید کے دن بنی گالہ میں عمران خان کے ساتھ بنائی گئی تصویر کے نیچے لکھا ہے کہ میرے بیٹے نے عمران خان کے گلے میں بازوڈالناچاہالیکن عمران پیچھے ہٹ گیا۔

واضح رہے کہ عمران خان کی سابق اہلیہ جمائما گولڈ اسمتھ نے بھی کتاب کے متن پر اعتراض اٹھاتے ہوئے ریحام خان کے خلاف عدالت جانے کا اعلان کرتے ہوئے کہا تھا کہ اگر ریحام خان کی کتاب برطانیہ میں شائع ہوئی تو وہ ان پر ہتک عزت کا دعویٰ کریں گی۔

Check Also

مجھے نسلی تعصب کا نشانہ بنایا جارہا ہے، نیدرلینڈ میں زیرتعلیم پاکستانی طالبعلم کا احتجاج

نیمیخن: نیدر لینڈ کے شہر نیمیخن میں واقع ریڈبوڈ یونیورسٹی میں زیرِ تعلیم ایک پاکستانی …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *